33.1 C
Delhi
July 15, 2024
Hamari Duniya
Breaking News بزنس

اب ریلائنس بیچے گا مٹھائی، مشہور حلوائیوں کی مٹھائیاں ریلائنس ریٹیل اسٹورز پر ملنی شروع

Reliance sweet

نئی دہلی۔ مٹھائی کے شوقینوں کے لیے اچھی خبر، اب ملک کے 50 سے زیادہ مشہور حلوائیوں کی مٹھائیاں ریلائنس ریٹیل اسٹورز پر ملنی شروع ہوگئی ہیں۔ ہندوستانی روایتی پیکڈ مٹھائی کی مارکیٹ کا تخمینہ تقریباً 4,500 کروڑ روپے ہے اور اگلے چند سالوں میں اس کے بڑھ کر 13 ہزار کروڑ روپے ہونے کی امید ہے۔ جبکہ غیر منظم مٹھائی بازار تقریباً 50 ہزار کروڑ کا مانا جاتا ہے۔ اس کے مطابق، منظم مٹھائی بازار میں کمائی کا ایک بہت بڑا موقع ہے، جسے ریلائنس ضائع نہیں کرنا چاہتا۔روایتی حلوائی کی دکانوں پر ہجوم ہوا کرتا تھا لیکن ملک کے مٹھائی بازار تک ان کی رسائی نہیں تھی۔ اوپر سے جعلی ماوا اور طہارت سے متعلق منفی خبروں نے حلوائیوں کی کمر توڑ دی تھی۔ ریلائنس ریٹیل کے ساتھ مل کر، یہ مشہور اور روایتی کنفیکشنرز اب علاقائی بازاروں سے آگے بڑھ رہے ہیں تاکہ ملک بھر میں اپنی مخصوص مٹھائیوں کے ذریعے صارفین کے ذائقے کو بڑھا سکیں۔ سدابہار ڈبے کے رس گلوں اور گلاب جامن کا دور ہمیشہ رہے گا، لیکن حلوائی اب پیک شدہ مٹھائیوں کے ساتھ بھی کئی نئے تجربات کر رہے ہیں۔
اجمیر کے چونی لال حلوائی کی کہانی ملک کے مشہور لیکن محدود بازار میں کام کرنے والے ہزاروں حلوائیوں سے ملتی جلتی تھی۔ دکان کے باہر صبح سے ہی خریداروں کی قطار لگ جاتی ہے۔ آمدنی بھی معقول ہے لیکن آخر ایک دکان سے کتنے گاہک مطمئن ہو سکتے ہیں۔ریلائنس رٹیل روایتی حلوائیوں کے ساتھ تعاون کر رہا ہے تاکہ چونی لال جیسے حلوائیوں کی مٹھائیوں اور نمکینوں کی شیلف لائف کو بڑھایا جا سکے اور اس بات کو یقینی بنایا جا سکے کہ صارفین کو تازہ ترین مٹھائیاں ملیں۔
چونی لال کی نئی نسل 70 سال پرانی دکان کی مٹھائی اور نمکین کو اجمیر کی گلیوں سے لے کر ملک کے کونے کونے میں لے جانا چاہتی ہے۔ کاروبار کو سنبھالنے والے 34 سالہ ہتیش کہتے ہیں، “ہمیں ریٹیل آؤٹ لیٹس کھولنے کے لیے بہت سے بڑے اداروں سے پیشکشیں موصول ہوئی ہیں، لیکن یہ کاروبار بہت زیادہ سرمایہ لیتا ہے۔ ریلائنس کے ساتھ ہماری شراکت داری کے بعد ہماری فروخت دوگنی ہو گئی ہے کیونکہ کمپنی نے ہمیں آٹومیشن اور بڑے پیمانے پر پیداوار سے متعارف کرایا ہے۔ ہماری دکان کو ریلائنس ریٹیل نے قومی اسٹور بنا دیا ہے۔مشہور مٹھائیوں میں کالیوا کا ‘ تل بیسن لڈو’، گھسیتارام کا ‘ ممبئی حلوہ’، پربھوجی کا ‘دربیش لڈو اور میتھی دانالڈو’، دودھ مشتھانبھنڈار (ڈی ایم بی) کا ‘ مالپوا’ اور لال سویٹس کا میسور پاک اور دھارواڑ پیڈا ریلائنس رٹیل کے سٹورز پر دستیاب ہیں۔چونی لال حلوائی کا مشہور کچورا اور چاکلیٹ برفی جلد ہی ریلائنس اسٹورز پر دکھائی دے گی۔ ریلائنس ریٹیل کے گروسری ریٹیل کے رٹیل کے سی ای دامودر مالا ،نے کہا، “ہم ہندوستان میں سب سے بڑی ملٹی برانڈ کنفیکشنری بننا چاہتے ہیں۔ ہم چاہتے ہیں کہ روایتی مٹھائیاں مغرب جیسے ملک کے ہر کونے اور کونے تک پہنچیں۔ بنگال سے رس گلہ اور اڑیسہ تمل ناڈو کے گاہک کا منہ میٹھا کر سکتا ہے۔“
روایتی مٹھائیوں کی فروخت کو بڑھانے کے لیے، ریلائنس ریٹیل نے اسٹورز میں ایک سے زیادہ ملٹی پل بے اور فری سٹینڈنگ یونٹسقائم کیے ہیں۔ یہ کچھ ایسا ہی ہے جو ریٹیل اسٹورز چاکلیٹ بیچنے کے لیے کرتے ہیں۔ ریلائنس ریٹیل علاقائی مٹھائی بنانے والوں کو سنگل سرو پیک تیار کرنے میں بھی مدد کر رہا ہے، یعنی ایک گاہک گھانا کی ڈارک چاکلیٹ کی جگہ دیسی میسور پاک یا لڈو کا ایک چھوٹا پیکٹ خرید سکتا ہے۔

Related posts

کیاشعیب ملک سے الگ ہوں گی ثانیہ؟ افواہوں کا بازار گرم

Hamari Duniya

مدرسہ خدیجة الكبرى گرلس کالج نوگڑھ میں ناظم ضلعی جمعیت اہلِ حدیث کی تشریف آوری،اعزازسے نوازا گیا

Hamari Duniya

نوجوت سنگھ سدھو نے بھگونت مان کو دی مبارکباد، لکھا- امید کے پہاڑ سے نیا دور شروع

Hamari Duniya News