40.6 C
Delhi
May 20, 2024
Hamari Duniya
Breaking News بزنس

یوپی میں سرمایہ کاری کیلئے مکیش امبانی نے خزانہ کا منہ کھول دیا

Mukesh Ambani
یوپی 5 سالوں میں 1 ٹریلین  ڈالرکی معیشت بن جائے گی
ریلائنس انڈسٹریز اتر پردیش میں 75 ہزار کروڑ کی سرمایہ کاری کرے گی:  مکیش امبانی
۔  ایک لاکھ نئی ملازمتیں پیدا کی جائیں گی
۔ ریلائنس نے 2018 سے اب تک 50 ہزار کروڑ کی سرمایہ کاری کی ہے

لکھنؤ، 10 فروری(ایچ ڈی نیوز)۔

ملک کی سب سے بڑی کمپنی کے مالک مکیش امبانی نے اگلے چار سالوں کے دوران اتر پردیش میں 75 ہزار کروڑ روپے کی سرمایہ کاری کا اعلان کیا ہے۔ اس سرمایہ کاری سے تقریباً 1 لاکھ نئی ملازمتیں پیدا ہونے کی امید ہے۔ لکھنؤ میں منعقدہ یوپی گلوبل انویسٹرس سمٹ میں خطاب کرتے ہوئے مکیش امبانی نے دعویٰ کیا کہ اتر پردیش 5 سال کے اندر 1 ٹریلین ڈالر کی معیشت بن جائے گا۔
ریلائنس اتر پردیش میں 10 گیگا واٹ قابل تجدید توانائی کی صلاحیت قائم کرے گی۔ یہ اتر پردیش میں اب تک کا سب سے بڑا قابل تجدید توانائی پروجیکٹ ہوگا۔ کمپنی نے یوپی میں بائیو گیس توانائی کے کاروبار میں قدم رکھنے کا بھی اعلان کیا۔ اس پر مکیش امبانی نے کہا کہ بائیو گیس سے نہ صرف ماحول بہتر ہوگا بلکہ کسانوں کو بھی کافی فائدہ ہوگا۔ ہمارے کسان صرف خوراک فراہم کرنے والے نہیں ہیں، اب وہ توانائی فراہم کرنے والے بھی بنیں گے
ریلائنس نے ریاست کے گاؤں اور چھوٹے شہروں میں سستی تعلیم اور صحت کی دیکھ بھال کے لیے  جیو پلیٹ فارم کے ذریعے دو پائلٹ پروجیکٹس  جیو۔ سکول اور  جیو ۔ اے آئی۔ ڈاکٹرکا بھی اعلان کیا۔ اس کے ساتھ ہی مکیش امبانی نے یوپی کی زرعی اور غیر زرعی مصنوعات کی سورسنگ میں کئی گنا اضافہ کرنے کا ارادہ بھی ظاہر کیا۔ اس سے کسانوں، مقامی کاریگروں، کاریگروں اور چھوٹے اور درمیانے درجے کی صنعتوں کو فائدہ ہوگا۔ مکیش امبانی نے 2023 کے آخر تک یوپی کے تمام شہروں میں 5G شروع کرنے کے بارے میں بھی بات کی۔
مکیش امبانی نے کہا کہ “اتر پردیش نئے ہندوستان کے لیے امید کا مرکز بن گیا ہے۔ نوئیڈا سے گورکھپور تک لوگوں میں جوش و خروش نظر آرہا ہے۔ ہم مل کر ہندوستان کی سب سے زیادہ آبادی والی ریاست کو ہندوستان کی سب سے خوشحال ریاست میں تبدیل کریں گے

Related posts

روسی صدر پوتن نے صدرجمہوریہ اور وزیراعظم کو نئے سال پر بھیجا پیغام، دنیا کو ہندوستان سے ہیں بڑی امیدیں

Hamari Duniya

۔۔۔تواس وجہ سے بھارت جوڑو یاترا درمیان میں ہی چھوڑنا چاہتے تھے راہل گاندھی

Hamari Duniya

گاندھی خاندان کے گرد حکومت کا گھیرا تنگ،راجیو گاندھی فاونڈیشن کا لائسنس منسوخ

Hamari Duniya