33.1 C
Delhi
July 15, 2024
Hamari Duniya
Breaking News قومی خبریں

ممبرپارلیمنٹ عمران پرتاپ گڑھ کو مسیحی برادری کی جانب سے استقبالیہ

Imran Pratapgarhi

نئی دہلی(ایچ ڈی نیوز)۔
دہلی کے کانسی ٹیوشن کلب میں عیسائی سماج کے زیرِ اہتمام سماج جوڑوں بھارت جوڑوں کے عنوان سے آل انڈیا مسیح ملن تقریب کا انعقاد کیا گیا۔جس میں کانگریسی لیڈر اور ممبرآف پارلیمنٹ عمران پرتاب گڑھی نے مہمان خصوصی کی حیثیت سے شرکت کی۔ انہوں نے کہاکہ عیسائی سماج نے جو تعلیم پر کام کیا ہے، اسکا ڈنکا پورے ہندوستان میں بج رہاہے۔انہوں نے کہاکہ تاناشاہمیشہ کمزور ہوتے ہیں, جو آج اقتدار میں ہیں وہ تانا شا ہ ہیں اور ا اگر ہم ایک ساتھ مل کر کھڑے ہو جائینگے تو نفرت کا صفایا ہو جائیگا۔ یہی بات بار بار لیڈر راہول گاندھی کہ رہے ہیں۔انہوں نے مزید کہاکہ کانگریس کی روایت رہی ہے,وہ صرف ترقیاتی کاموں میں یقین رکھتے ہے، اسی کا صلہ ہے کہ آج پورے ملک کوکانگریس نے بیش بہا ترقی یافتہ کام کرائے، مگر کبھی ڈھنڈھورا نہیں پیٹا۔انہوں نے بھارت جوڑو یاترا کا ذکر کرتے ہوئے کہاکہ کا نگر یس نیتا ہمیشہ زمین سے جڑے رہے ہیں اور ایک بار پھر ملک کو جوڑنے کی ضرورت پہش آئی تو انہوں نے بھارت جوڑو یاترا کے آغاز کا منصوبہ بنایا اور راہل گاندھی کی قیادت میں پیدل چل 35 سو 70 کلو میٹر کاسفر طے کرتے ہوئے بھارت کو جوڑنے کا کام کریں گے جو ایک مثالی کام ہے۔انہوں نے کہاکہ ہم بھارت کو جوڑنے اور جموریت کی بقاءکیلئے پیدل سفر کرینگے۔ آج جموریت کو بلڈوزر کیا جا رہا ہے اگر آج اقلیت متحد نہیں ہوئے تو ہمیں م±سلسل آپس میں باننٹنے اور ڈرانے توڑنے کی کوشش کی جاتی رہے گی۔تاہم ہمیں ایک جٹ ہوکر مضبوط طاقت بننا ہوگا۔انہوں نے اتحاد کی مثال دیتے ہوئے کہاکہ زرعی قوانین پر اڑی مودی حکومت کو کسانوں نے اپنے اتحاد کے ذریعے اور 700 کسانوں کی شہادت کے بعد قوانین کو واپس لینے پر مجبور ہونا پڑا۔عمران پرتاپ گڑھی نے عیسائی سماج کے ذریعہ منعقد پروگرام کی ستائش کی اور کہاکہ آپ لوگوں کے جذبے کو دیکھ کر لگتا ہے کہ بھارت کو جوڑنے میں اہم کردار ادا کریں گے۔کیونکہ آپ لوگ زندہ دل ہے۔آج سیاست کیلئے مشکل وقت ہے ہم سب کو مل کر آواز اٹھانی ہوگی تبھی تاناشاہوں کے تخت ہلیں گے۔پروگرام کے کنویننر رونیٹ ڈیمولو نے کہا کہ کانگریس پارٹی واحد سیاسی جماعت ہے جو تمام مذاھب کے لوگوں ساتھ لیکر چلتی ہے۔ا±نہوں نے کہا کہ آج ہمیں بیروزگاری ،بھوک،سے لڑنے کی ضرورت ہے۔انہوں نے کہا کہ ہمارے قائد راہل گاندھی نے کہا تھا کہ ہمیں ڈرنے کی ضرورت نہیں ہے۔راہل گاندھی اور ان کے نظریات کو دیکھتے ہوئے ہمیں فخر محسوس ہوتا ہے کہ وہ آنکھوں میں آنکھیں ملا کر اقتدار کے نشے میں چور حکومت سے بات کرتے ہیں۔راجیہ سبھا (ایم پی) شکتی سنگھ گوہل نے کہا کہ موجودہ حکومت مہنگائی اور بدعنوانی کو چھپاکرلوگوں کے درمیان نفرت پھیلاکر راج کررہی ہے, یہی سیاست انگریزوں کی تھی۔ انہوں نے یہ بھی کہاکہ آج مودی کے راج میں خواتین محفوظ نہیں ہیں .وہی بلقیس بانو نے انصاف کے لیے سالوں سے لڑائی لڑی, جو ملزمین قیدی تھے۔انہیں رہا کر دیا گیا جو کہ سپریم کرٹ کے حکم کی پامالی کی وہیں ایسے قصورواروں کا استقبال کرنا یہ ہندوستانی تہذیب قطعی نہیں ہے۔نظامت کے فرائض معروف اینکر خوشبو نے بخوبی انجام دئے, جبکہ پروگرام کا اختتام قومی ترانہ سے ہوا۔

Related posts

بی جے پی دفتر میں جم کرچلیں کرسیاں، زبردست ہنگامہ

Hamari Duniya

اسرائیل کو شرمندگی کا سامنا، افریقی یونین کے اجلاس سے اسرائیل کو باہر نکال دیا گیا

Hamari Duniya

ہلدوانی انہدام معاملہ: سپریم کورٹ نے ریلوے کو 8 ہفتوں کا دیاوقت

Hamari Duniya