36.1 C
Delhi
May 21, 2024
Hamari Duniya
Breaking News دہلی

کانگریس نے ’میری چمکتی دہلی‘کے نام سے پیش کیا دہلی کوچمکانے کا روڈ میپ

Delhi Congress

نئی دہلی، 30 نومبر(ایچ ڈی نیوز)۔
دہلی میونسپل کارپوریشن انتخابات’میری چمکتی دہلی‘ کے لئے کانگریس کا منشور آج دہلی پردیش کانگریس کمیٹی کے دفتر راجیو بھون میں ریاستی کانگریس صدر چودھری کے ساتھ اے اے سی کمیٹی کے سوشل میڈیا اور ڈیجیٹل پلیٹ فارم پر جاری کیا گیا۔ یہ منشور چیئرپرسن محترمہ سپریہ شرینٹے، سابق ریاستی صدر مسٹر سبھاش چوپڑا، رابطہ کمیٹی کے چیئرمین دیویندر یادو، میڈیا ڈپارٹمنٹ کے چیئرمین مسٹر انل بھاردواج، ریاستی نائب صدر مسٹر مدیت اگروال نے جاری کیا۔ اس موقع پر پروفیشنل کانگریس کے چیئرمین مسٹر امیتابھ دوبے، ریسرچ ڈیپارٹمنٹ کے چیئرمین مسٹر آشیش سریواستو، قانونی و انسانی حقوق کے شعبہ کے چیئرمین ایڈوکیٹ سنیل کمار، میڈیا ڈپارٹمنٹ کے وائس چیئرمین انوج اتریہ اور مسٹر راجیش گرگ بھی موجود تھے۔

Delhi Congress
دہلی کانگریس پارٹی کے ریاستی دفتر میں میری چمکتی دہلی کا روڈ میپ میڈیا کے سامنے پیش کرتے ہوئے کانگریسی رہنما

دہلی پردیش کانگریس کمیٹی کے صدر چودھری انیل کمار نے کہا کہ بی جے پی نے 15 سال اور اروند کیجریوال نے 8 سال کے دور حکومت میں دہلی کی ترقی کو تباہ کردیا اور دہلی کو آلودہ اور کچرے کے پہاڑ بنادیا۔ دہلی میونسپل کارپوریشن میں کانگریس کے اقتدار میں آتے ہی وہ راجدھانی دہلی کی خراب تصویر اور قسمت کو بہتر بنائے گی اور میری چمکتی ہوئی دہلی کو شیلا دکشت کی دہلی بنائے گی۔
ہاو¿س ٹیکس گزشتہ معاف، اگلا نصف، گاو¿ں اور 32 گز سے کم رقبے کے فلیٹ پر ٹیکس مکمل طورسے معاف کیا جائے گا۔ ہر غریب کے گھر میں مفت آر او دے کر سالانہ اوسطاً 10,000 روپے دے کر مالی مدد دی جائے گی۔
چودھری انیل کمار نے کہا کہ گھر گھر جا کر کچرے کو 100 فیصد جمع کرکے دہلی کو کچرے اور آلودگی سے پاک دہلی بنایا جائے گا۔ اگلے 5 سالوں میں ہم موجودہ 23 فیصد گرین ایریا کو 5 فیصد تک بڑھانے کے ہدف کے ساتھ 32 فیصد گرین ایریا بنا کر گرین دہلی بنائیں گے۔ دلتوں کی فلاح و بہبود کے لیے کارپوریشن کو کنٹریکٹ ملازمت سے پاک کرکے صفائی کے عملے کو مستقل ملازمت دیں گے۔ بہتر پرائمری تعلیم کے لیے ہر طالب علم کو ایک ٹیبلٹ دیا جائے گا۔ کارپوریشن کے تمام اسپتالوں کو سپر اسپیشلٹی اسپتال بنایا جائے گا اور شیلا دکشت سواستھیا سہایتا یوجنا کے تحت دوائیں آدھی قیمت پر دستیاب ہوں گی۔ گھریلو ملازمین کی مالی مدد کے لیے شیلا دکشت ڈومیسٹک لیبر ویلفیئر اسکیم شروع کی جائے گی۔ غریبوں کی حق تلفی کے تحت غریبوں کے گھروں پر بلڈوزر نہیں چلنے دیں گے۔ انہوں نے کہا کہ انتظامی شفافیت کے لیے کونسلرز کے فنڈز کا سوشل آڈٹ کیا جائے گا۔ بی جے پی اور عام آدمی پارٹی کی شراکت سے ہم غازی پور، بھلسوا اور اوکھلا میں کھڑے کچرے کے پہاڑوں کو 18 ماہ میں ختم کریں گے اور شراب سے متعلق لائسنس جاری کرنے سے پہلے عوام سے مشورہ کرکے ان کی رائے کو یقینی بنائیں گے۔

Related posts

دارالعلوم فیض محمدی ہتھیا گڈھ میں تکمیل حفظ قرآن کی تقریب کا انعقاد

Hamari Duniya

آل انڈیا مسلم مجلس مشاورت نے آئین کی شق 341 کا جائزہ لینے کے لیے بنائے گئے کمیشنوں کا خیر مقدم کیا

Hamari Duniya

فلسطینیوں پراسرائیلی مظالم کو دیکھے گی دنیا، اسرائیلی دباو کام نہ آیا

Hamari Duniya