36.1 C
Delhi
May 21, 2024
Hamari Duniya
Breaking News قومی خبریں

انکیتا بھنڈاری قتل معاملہ: اتراکھنڈ حکومت کی مشکلیں بڑھ گئیں،اہل خانہ نے آخری رسومات ادا کرنے سے انکار کردیا، رکھ دی یہ بڑی شرط

Ankita Bhandari

رشیکیش(ایچ ڈی نیوز)۔
آخری پوسٹ مارٹم رپورٹ آنے اور خاندان کے ایک فرد کو سرکاری نوکری دینے کے مطالبے کی وجہ سے خاندان نے انکیتا بھنڈاری کی آخری رسومات روک دی ہیں۔ خاندان کے اس فیصلے نے انتظامیہ میں ہلچل مچا دی ہے۔ موقع پر موجود اہلکار اہل خانہ کو منانے کی کوشش کر رہے ہیں۔ایمس رشی کیش اسپتال میں سخت حفاظتی انتظامات کے درمیان پوسٹ مارٹم کے بعد ہفتہ کی شام انکیتا کی لاش اس کے رشتہ داروں کے حوالے کردی گئی۔ انتظامیہ نے میت کی آخری رسومات کے انتظامات بھی کیے تھے تاہم اہل خانہ نے غروب آفتاب کے بعد آخری رسومات ادا کرنے سے انکار کردیا اور اتوار کو آخری رسومات ادا کرنے کی بات کی۔ اس لیے میت کو دیر رات ایمس رشیکیش سے لایا گیا اور سری نگر میڈیکل کالج کے مردہ خانہ میں رکھا گیا۔
اتوار کی صبح، خاندان کے ارکان نے ابتدائی پوسٹ مارٹم رپورٹ میں ردوبدل کے خوف سے حکومت کے کام کاج پر سوال اٹھایا اور انکیتا کی لاش کا آخری رسومات کرنے سے انکار کر دیا، جس سے انتظامیہ دنگ رہ گئی۔ انکیتا کے بھائی نے کہا ہے کہ آخری رپورٹ آنے کے بعد ہی آخری رسومات ادا کی جائیں گی، لاش کا پوسٹ مارٹم کرانے کا مطالبہ کیا ہے۔ انکیتا کے والد وریندر بھنڈاری کا کہنا ہے کہ انتظامیہ نے جلد بازی میں ریسارٹ میں انکیتا کا کمرہ توڑ دیا۔ اس میں کوئی ثبوت ہو سکتا ہے۔ اب انکیتا کی آخری رسومات پوسٹ مارٹم کی حتمی رپورٹ آنے کے بعد ہی کی جائیں گی۔ انتظامیہ کی ٹیم لواحقین کو آخری رسومات کے لیے قائل کرنے میں مصروف ہے۔
سریکوٹ کے ریونیو گاو¿ں، پوڑی کے گاو¿ں پنچایت، ترقیاتی بلاک دھورس کی بیٹی انکیتا کے قتل کے بعد لوگوں میں ناراضگی ہے۔ ایس ڈی ایم سری نگر اجے ویر سنگھ نے کہا کہ پولیس اور انتظامیہ نے آخری رسومات کے دوران کسی قسم کی کوتاہی سے بچنے کے لیے حفاظتی انتظامات کیے ہیں۔ ایڈیشنل سپرنٹنڈنٹ آف پولس پوڑی شیکھر چندر سویل نے انکیتا قتل کیس سے متعلق شواہد مٹانے کے حوالے سے سوشل میڈیا پر چل رہی خبروں کو غلط قرار دیا ہے۔ انہوں نے کہا کہ پولیس نے کیس سے متعلق تمام شواہد کو محفوظ رکھا ہے۔
میڈیا سے گفتگو میں ان کا کہنا تھا کہ 22 ستمبر کو ٹیم نے ریزورٹ کی ویڈیو گرافی کی تھی۔ 23 ستمبر کی صبح فورنزک ٹیم نے انکیتا کے کمرے اور پورے ریزورٹ سے الیکٹرانک اور سائنسی ثبوت اکٹھے کیے اور اسے محفوظ کرلیا۔ پولیس کے پاس واقعے کے حوالے سے کافی شواہد موجود ہیں جو ملزمان کو کیفر کردار تک پہنچانے کے لیے کافی ہیں۔ اے ایس پی نے کہا کہ اب ایس آئی ٹی معاملے کی جانچ کر رہی ہے۔ خبر لکھے جانے تک انتظامیہ لواحقین کو منانے میں مصروف ہے، عوام کے شدید غم و غصے کے پیش نظر سیکیورٹی کے زبردست انتظامات کیے گئے ہیں۔

Related posts

2023 جشن یا محاسبہ

Hamari Duniya

۔۔۔تو ہر بچہ پیدا ہونے سے پہلے اپنی ماں سے پوچھتا کہ اعظم خان سے پوچھ لو نکلنا ہے یا نہیں،بیان پر ہنگامہ

Hamari Duniya

مولانا محمود مدنی نے آرایس ایس لیڈر کے جھوٹ کو بے نقاب کردیا

Hamari Duniya