44.1 C
Delhi
June 18, 2024
Hamari Duniya
Breaking News قومی خبریں

وزیرداخلہ امت شاہ نے پلوامہ حملہ کا الزام گپکار اتحاد پر عائد کردیا

Amit Shah- Home Minister

بارہمولہ (ایچ ڈی نیوز)
وزیر داخلہ امت شاہ نے بارہمولہ ریلی کے دوران جموں و کشمیر کے سابق وزرائے اعلیٰ فاروق عبداللہ اور محبوبہ مفتی پر حملہ کرتے ہوئے گپ کار اتحاد پر ملک میں پاکستانی دہشت گردوں کے لیے سرخ قالین بچھانے کا الزام لگایا۔ امت شاہ نے کہا کہ’پیپلز الائنس فار گپ کار ڈیکلریشن ماڈل‘ (پی اے جی ڈی) نے علاقے کے نوجوانوں کو پتھر ، بند کالج اور مشین گنوں کے ساتھ پیش کیا، جبکہ وزیر اعظم نریندر مودی کے ماڈل نے انہیں تعلیم دی ہے۔ پی اے جی ڈی فاروق عبداللہ اور محبوبہ مفتی کے ذریعہ تشکیل جموں و کشمیر میں چھ علاقائی جماعتوں کے درمیان ایک سیاسی اتحاد ہے۔ اتحاد آرٹیکل 370 اور جموں و کشمیر کو ریاست کا درجہ بحال کرنے کا مطالبہ کرتا ہے۔
وزیر داخلہ نے کہا کہ دو ماڈل ہیں ، وزیر اعظم نریندر مودی کا ماڈل روزگار ، امن اور بھائی چارہ اور دوسرا گپ کار ماڈل ہے جس کی وجہ سے پلوامہ حملہ ہوا۔ وزیر اعظم نے پلوامہ میں 2000 کروڑ کی لاگت سے ایک اسپتال بنایا۔ گپ کار ماڈل ملک میں پاکستانی دہشت گردوں کے لیے سرخ قالین بچھا رہا ہے جبکہ مودی ماڈل نوجوانوں کو روزگار فراہم کرنے کے لیے زمین پر 56,000 کروڑ روپے کی سرمایہ کاری کر رہا ہے۔ گپ کار ماڈل نے نوجوانوں کے ہاتھوں میں پتھر ، بند کالج اور مشین گنیں تھما دیں۔ مودی ماڈل میں نوجوانوں کو آئی ای ایم، آئی ٹی، اے آئی آئی ایم ایس، این آئی ایف ٹی، اوراین ای ای ٹی۔ دیے گئے۔ نوجوان تعلیم چاہتے ہیں لیکن فاروق عبداللہ ہاتھ میں پتھر دیکھنا چاہتے ہیں۔
مرکزی وزیر داخلہ شاہ نے سابق وزرائے اعلیٰ سے ان کے متعلقہ دور کے دوران اس شعبے میں سرمایہ کاری کے طور پر لائی گئی رقم کے بارے میں پوچھا۔ وزیر داخلہ نے کہا کہ میں آج فاروق عبداللہ اور محبوبہ مفتی سے یہ پوچھنے آیا ہوں کہ تین خاندانوں کے 70 سال کے دور حکومت میں آپ نے جموں و کشمیر میں کتنی سرمایہ کاری کی۔ کتنی صنعتیں قائم ہوئیں ؟ کتنے نوجوانوں کو روزگار دیا گیا۔یہاں70سال میں محض15000کروڑ کا سرمایہ کیا گیا جبکہ وزیراعظم نریندر مودی نے ان تین سالوں میں 56000کروڑ روپے کا سرمایہ کاری کی۔ وزیرداخلہ امت شاہ نے جموں وکشمیر کے تین خاندانوں پر دہشت گردوں کے ذریعہ علاقہ کے شہروں کے قتل کرانے میں ملوث ہونے الزام عائد کیا۔وزیرداخلہ نے ان سے سوال کیا کہ کیا دہشت گردی نے دنیا میں کسی کا فائدہ کیا ہے؟ کیا دہشت گردی ہمدردی رکھنے والے ایسی کسی واقعہ کے بارے میں بتا سکتے ہیں۔

Related posts

الشفاء ہاسپٹل دہلی و میڈیکل سروس سوسائٹی کی پہل

Hamari Duniya

مغربی بنگال میں بھارت جوڑو نیائے یاترا کو ملے پیار سے راہل گاندھی ہوئے خوش

Hamari Duniya

فلموں کے بائیکاٹ کا ٹرینڈ چلانا مطلب معیشت کو نقصان پہنچانا اور لوگوں کو بے روزگاربنانا

Hamari Duniya