36.1 C
Delhi
May 20, 2024
Hamari Duniya
Breaking News بزنس

نیتی آیوگ نے وومن ٹرانسفارمنگ انڈیا ایوارڈ کے پانچویں ایڈیشن کا انعقاد کیا

کیرالہ کی امرتا س(َرو وکھیم ری یوز ایبل پیڈ( کی انجو بِست اور ایکا بایو کیمیکلز پرائیویٹ لمیٹیڈ کی آردرا چندرا مولی ، اُن 75 خواتین میں شامل ہیں ، جنہیں نیتی آیوگ نے ویمن ٹرانسفارمنگ انڈیا کے ایوارڈ سے نوازا ہے۔ خواتین ،ہندوستان کو ایک ’سشکت اور سمرتھ بھارت‘ میں تبدیل کرنے میں مسلسل کلیدی کردار ادا کر رہی ہیں۔ مختلف شعبوں میں ، ان خواتین کی نمایاں کامیابیوں کے اعتراف میں نیتی آیوگ نے ویمن ٹرانسفارمنگ انڈیا ایوارڈز کا آغاز کیا ہے۔ اس سال، ہندوستان کی آزادی کے 75 سالہ جشن ’ آزادی کا امرت مہوتسو ‘کے ایک حصے کے طور پر، 75 خواتین کو ڈبلیو ٹی آئی ایوارڈز سے نوازا گیا۔انجو بِست اور ان کی ٹیم کیلے کے ریشے سے کئی بار استعمال ہونے والے حیض کے پیڈ بنانے والی دنیا کی پہلی خاتون ہیں، جو کہ زرعی فضلے سے تیار کئے جا رہے ہیں۔ سوکھیم ری یوز ایبل پیڈز نے کئی ایوارڈز جیتے ہیں اور یہ بین الاقوامی سطح پر فروخت کئے جا رہے ہیں۔ ان کا ویژن یہ ہے کہ اعلیٰ معیار کے پیڈ ، جو وہ برآمد کرتی ہیں ، بھارت کے دیہی علاقوں میں بھی بہت سستی قیمتوں پر دستیاب ہونے چاہئیں ۔ اب تک، انہوں نے 500,000 سے زیادہ پیڈ فروخت اور تقسیم کئے ہیں، جو سالانہ 2000 ٹن سے زیادہ CO2 کے مساوی اخراج کو روکنے میں مدد کرتے ہیں۔ اس سے ایک اندازے کے مطابق 43,750 ٹن غیر بایو ڈی گریڈیبل حیض کے فضلے کو ختم کرنے میں بھی مدد ملی ہے۔امرتا سَرو اعلیٰ معیار اور سستے حیض کے پیڈ کیلے کے ریشے سے تیار کئے گئے ہیں ، خواتین اور لڑکیوں کو فراہم کر رہی ہے ۔آردرا ایک بایوٹیک انجینئر، کاروباری شخصیت اور انٹرپرینیورشپ تحقیق کار ہیں ۔ وہ ایکا بایو کیمیکلز پرائیویٹ لمیٹیڈ کی بانی اور منیجنگ ڈائریکٹر ہیں ، جو بھارت میں پہلی مکمل طور پر خواتین کی ملکیت والی ماحولیاتی بایوٹیک کمپنی ہے ۔ وہ سائنس اور انٹرپرینیورشپ کو ، ان تمام شعبوں میں دلچسپی رکھنے والوں ، خاص طور پر خواتین کے لئے قابل رسائی بنانے کے لئے پرجوش ہیں ۔آردرا نے یو سی ایل سے مینجمنٹ میں ایم ریس ، واروِرک بزنس اسکول سے مینجمنٹ میں ایم ایس سی اور کیرالہ یونیورسٹی سے بایو ٹیکنالوجی اور بایو کیمیکل انجینئرنگ میں بیچلرز کی ڈگری حاصل کی ہے ۔ایکا بایو کیمیکلز ماحول دوست متبادلوں کی فراہمی میں مدد کرتی ہے ، جو بہت موثر ہے اور دیہی کھیتی باڑی ، گندے پانی کی صفائی اور کچرے کے بندوبست پر توجہ مروکز کرتی ہے ۔ یہ زمین پر انسانی نشانات کو کم کرنے میں قابلِ قدر تعاون کر رہی ہے ۔

Related posts

ٹریفک رول توڑنے پر برطانوی وزیراعظم پر جرمانہ عائد کردیا گیا

Hamari Duniya

دہلی مبینہ شراب گھوٹالہ: وزیراعلیٰ اروند کیجریوال گرفتار،آپ نے سپریم کورٹ سے رجوع کیا

Hamari Duniya

بلقیس بانو کےس کے سزا یافتہ مجرموں کی رہائی افسوسناک:عارف سیفی

Hamari Duniya